احوال وطن

دہلی فساد زدگان کے مکانات کی تعمیر کے لیے جمعیۃ علماء ہند ابتدائی طور پر ایک کروڑ روپیے جاری کرے گی

نئی دہلی: 11؍مارچ (پریس ریلیز) مشرقی دہلی فساد زدگان کے آشیانے کو آباد کرنے کے لیے جمعیۃ علماء ہند نے پہلی قسط کے طور پر مبلغ ایک کروڑ روپے خرچ کرنے کا فیصلہ کیا ہے۔اس سلسلے میں جمعیۃ علماء ہند کے جنرل سکریٹری مولانا محمود مدنی نے کہا کہ شیووہار میں زبردست تباہی ہوئی ہے ، اس لیے وہاں کے سبھی تباہ شدہ مکانوں و دکانوں اور مساجد کی تعمیر کی جائے گی ۔واضح ہو کہ شیووہار میں جمعیۃ نے ریلیف کمیٹی کا باضابطہ دفتر قائم کیا ہے اور وہاں جمعیۃ کے کارکنان اور سہارن پور وشاملی جمعیۃ یوتھ کلب کے نوجوان شبانہ روز لوگوں کی خدمت میں لگے ہوئے ہیں ۔ دوسری طرف شیووہار میں جمعیۃ لیگل سیل کے وکلاء لوگوں کو انصاف دلانے میں بھی سرگرم ہیں، دن بھر متاثرین جمعیۃ کے دفتر میں اپنے معاملات لے کر آتے ہیں اور انصاف دلانے میں مدد مانگتے ہیں ۔

جمعیۃ علما ء ہند کی کوشش سے گزشتہ جمعہ فساد کے بعد پہلی بار نماز جمعہ کا اہتمام کیا گیا تھا،اس کے بعد لوگوں میں اعتما بحال ہو تا نظر آیا ، اب لوگ اپنے گھروں کو واپس آرہے ہیں ،لیکن ان کے سامنے سب سے بڑا مسئلہ سرچھپانے کا ہے ۔ ان کا آشیانہ اور لوازمات فسادیوں نے جلادیے ، اس لیے یہ ضروری ہے کہ فوری طور سے مکانات کی تعمیر کی جائے ۔دریں اثناء جمعیۃ علماء ہند نے اپنے طور پر لوگوں کے جانی و مالی نقصانات کا سروے بھی کیا ہے۔گزشتہ کچھ دنوں سے لوگوں کے گھروں کی بھی صفائی کی جارہی ہے ، جلے ہوئے ملبے ہٹائے جارہے ہیں ۔ شیو وہار میں مشکل دنوں سے خیمہ زن مولانا حکیم الدین قاسمی سکریٹری جمعیۃ علماء ہند نے بتایا کہ ہم نے تعمیر کے لیے یہاں ایک مقامی کمیٹی بھی تشکیل دی ہے ، اس کے علاوہ مر کز سے مولانا جمال قاسمی، مولانا غیور قاسمی وغیرہ مسلسل لگے ہوئے ہیں ، دوسری طرف لیگل معاملات کو ایڈوکیٹ محمد نوراللہ دیکھ رہے ہیں ۔

Related Articles

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے

Back to top button
×